Wednesday, 25 April 2018

Tea and Cookies

The tea is cold, cookies are finished.
I nibble on crumbs wanting more.
I’m not hungry; I don’t want this time to end.
The tea is cold, cookies are finished.
Savoring each moment stretches life
Until one precious moment feeds into the next.
The tea is cold, cookies are finished.
I nibble on crumbs wanting more.

Meri belos muhabbat k ghwa Chand bta


میری بے لوث محبت کے گواہ چاند بتا
میں نے ہر روز اسے یاد کیا ہے کہ نہیں
وہ جو معروف ہے
مشہور ہے لوگوں کیلیئے
دل یہ اس کے لیئے آباد کیا ہے کہ نہیں
میں نے ہر روز دعاؤں کے مہکتے گجرے
جھلملاتی ہوئ آنکھوں کے بکھرتے آنسو
گُدگُداتے ہوئے احساس کی پیاری خوشبو
اس کے کوچے کی طرف روز پہنچائ کہ نہیں
ٹہل کر دیر تلک رات کی تنہائ میں
دل کی گہرائیوں سے میں نے اسے سوچا کہ نہیں
سرسراتی ہوئ ان مست ہواؤں کی قسم
کھا کر بتلاؤ اے چاند...!!
اسے ٹوٹ کہ چاہا کہ نہیں
تیری ہی چاندنی میں لاکھ ستاروں کے تلے
میں نے پیغامِ محبت اسے بھیجا کہ نہیں
میری بے لوث محبت کے گواہ چاند بتا...!!
جسطرح رہ گیا صحراؤں میں رُل کر مجنوں
میں نے حق قدموں کا اس طرح نبھایا کہ نہیں
جس طرح کھائے تھے لیلیٰ نے جگر پر پتھر
میں نے بھی دیپ محبت کا جلایا کہ نہیں؟
پھر بھی وہ مجھ سے خفا ہے تو گلا کس سے کروں؟
اے چاند تو ہی ہم راز ہے میرا....
تو ہی بتا گواہ کس کو کروں؟
ہے کیا سچائ اسے کون بتلائے گا بھلا؟
میری بے لوث محبت کے گواہ چاند تو ہی بتا


Muhabbat


سنویہ جو تھوڑی سے محبت باقی ہے
ہم اس کو بچا لیتے ہے
اب ہم بچھڑ جاتے ہیں


Musafir



چلے جانے کی عُجلت میں
دِلوں پر جو گُزرتی ہے....
مُسافِر کب سمجھتے ہیں
اُنہیں احساس کب ہوتا ہے
زادِ رہ سمیٹیں تو کسی کا
دل سِمٹتا ہے ...........
رَگوں میں خُون جَمتا ہے...
کسی کے الوداعی ہاتھ ہِلتے ہیں
مگر دل ڈوب جاتا ہے
مگر جانے کی عُجلت میں مُسافِر
کب سمجھتے ہیں....!!!


Ashar



کھلی زمینوں میں جب بھی سرسوں کے پھول مہکیں
تم ایسی رت میں سدا مرا انتظار کرنا

جو لوگ چاہیں تو پھر تمہیں یاد بھی نہ آئیں
کبھی کبھی تم مجھے بھی ان میں شمار کرنا

"محسنؔ نقوی"


Nzam by A.H.Yaqin











Network by A.H.Yaqin










 
Design by Free WordPress Themes | Bloggerized by Lasantha - Premium Blogger Themes | Online Project management